لڑکی نے شادی کے منڈپ سے دلہا اغوا کرلیا

ویب ڈیسک  جمعرات 18 مئ 2017
اس معاملے کی تفتیش جاری ہے کہ لڑکی کون تھی اوراس نے ایسا کیوں کیا، پولیس: فوٹو: فائل

اس معاملے کی تفتیش جاری ہے کہ لڑکی کون تھی اوراس نے ایسا کیوں کیا، پولیس: فوٹو: فائل

اترپردیش: بھارتی ریاست اترپردیش میں ایک لڑکی درجنوں لوگوں کی موجودگی میں شادی کے منڈپ سے دلہے کو اغوا کرکے لے گئی۔

بھارتی ریاست اترپردیش کے ضلع ہمیرپور میں اشوک یادو نامی شخص کی شادی کی تقریب جاری تھی کہ اچانک ایک گاڑی منڈپ کے بالکل سامنے آکر رکی جس میں ایک لڑکی اور دو مرد سوار تھے، لڑکی نے باہر نکل کر دلہے کی کنپٹی پر پستول رکھ دیا اور ساتھ چلنے کو کہا۔ دلہے کو بھی اپنی زندگی پیاری تھی اور باراتیوں کو بھی، اس لیے لڑکی دن دیہاڑے درجنوں لوگوں کی موجودگی میں دلہے کو اغوا کرکے چلی گئی۔

اشوک کے والد رام ہیت یادو نے پولیس کوبتایا کہ ان کے بیٹے کی یہ دوسری شادی ہے اور اگر اشوک نے چوری چھپے کچھ کیا ہو تو انہیں اس کا علم نہیں ہے جب کہ دلہن کے باپ کا کہنا ہے کہ اس نے اپنی بیٹی کی شادی کے لیے بڑی رقم خرچ کی ہے، اس لئے اسے ہر حال میں اشوک کی رہائی درکار ہے۔

پولیس حکام کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اس معاملے کی تفتیش جاری ہے کہ لڑکی کون تھی اوراس نے ایسا کیوں کیا جب کہ پولیس کا خیال ہے کہ دلہے کو جس خاتون نے اغوا کیا ہے وہ ہوسکتا ہے کہ اس کی سابق محبوبہ ہو یا دونوں پہلے سے ہی شادی شدہ ہوں۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔