وزیراعظم نے کارکنوں کو جوڈیشل اکیڈمی آنے سے روک دیا

ویب ڈیسک  منگل 13 جون 2017

 اسلام آباد: وزیراعظم نواز شریف نے 15 جون کو جے آئی ٹی میں پیشی کے موقع پر پارٹی کارکنان کو جوڈیشل اکیڈمی آنے سے روک دیا ہے۔

وزیراعظم نواز شریف 15 جون کو پاناما کیس کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہوں گے جب کہ وزیراعظم کی آمد سے قبل ہی ریڈ زون اور جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف میں نہ صرف سیکیورٹی کے انتظامات سخت کردیے گئے ہیں بلکہ سڑکوں کی مرمت اور صفائی بھی شروع کردی گئی ہے۔

دوسری جانب وزیراعظم نواز شریف نے 15 جون کو جے آئی ٹی میں پیشی کے موقع پر پارٹی کارکنان کو جوڈیشل اکیڈمی اسلام آباد آنے سے منع کردیا ہے، وزیراعظم کے معاون خصوصی آصف کرمانی کا کہنا ہے وزیراعظم نے کارکنوں سے کہا ہے کہ مجھے دعاؤں میں یاد رکھیں۔

اس خبر کو بھی پڑھیں : جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف وزیراعظم کی حمایت میں بینرزآویزاں

وزیراعظم کی آمد کے سلسلے میں (ن) لیگی رہنما حنیف عباسی اور راولپنڈی کے مئیر سردار نسیم نے منگل کی صبح جے آئی ٹی کے باہرانتظامات کا جائزہ لیا، ڈی سی اسلام آباد اور ایس ایس پی آپریشنز ساجد کیانی بھی اسکواڈ کے ہمراہ پہنچے اور سیکورٹی انتظامات دیکھے جب کہ آئی جی اسلام آباد کی سربراہی میں اجلاس بھی ہوا جس میں فیصلہ کیا گیا کہ پیشی کے موقع پر کارکنوں کو جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف نہیں آنے دیا جائے گا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔