الیکشن کمیشن کا نیب سزا یافتہ افراد کو انتخابات میں حصہ لینے کی اجازت نہ دینے کا فیصلہ

ویب ڈیسک  پير 11 فروری 2013
الیکشن کمیشن نے مالی امور کے حوالے سے امیدواروں کی اسکروٹنی کو مؤ ثر بنانے کے لئے ایف بی آر اور اسٹیٹ بینک کے ڈیٹا سے بھی مدد لینے کا جائزہ لیا، فوٹو: فائل

الیکشن کمیشن نے مالی امور کے حوالے سے امیدواروں کی اسکروٹنی کو مؤ ثر بنانے کے لئے ایف بی آر اور اسٹیٹ بینک کے ڈیٹا سے بھی مدد لینے کا جائزہ لیا، فوٹو: فائل

اسلام آ باد: الیکشن کمیشن نے نیب سزا یافتہ افراد کو آئندہ ہونے والے عام انتخابات میں حصہ لینے کی اجازت نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن نے آئندہ عام انتخابات میں امیدواروں کی اسکروٹنی کا عمل مزید سخت بناتے ہوئے ان تمام سیاستدانوں اورایسے افراد کو الیکشن لڑنے کی اجازت نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے جو نیب سے کسی کیس میں سزا یافتہ ہوں یا انہوں نے پلی بارگین کی سہولت سے فائد ہ اٹھایا ہو۔

الیکشن کمیشن نے مالی امور کے حوالے سے امیدواروں کی اسکروٹنی کو مؤ ثر بنانے کے لئے ایف بی آر اور اسٹیٹ بینک کے ڈیٹا سے بھی مدد لینے کا جائزہ لیا ہے ، ذرائع کے مطابق اس مقصد کے لئے الیکشن کمیشن کا اہم اجلاس بدھ کو طلب کیا گیا ہے جس میں ان اداروں کے حکام بھی شرکت کریں گے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔