بھارت میں مجھے کام کی کمی نہیں، علی ظفر

نیٹ نیوز  جمعرات 21 فروری 2013
خوفزدہ ہونے کا کوئی فائدہ تو آج تک نہیں ہوا ہے، اداکارو گلوکار  فوٹو : فائل

خوفزدہ ہونے کا کوئی فائدہ تو آج تک نہیں ہوا ہے، اداکارو گلوکار فوٹو : فائل

ممبئی:  پاکستانی گلوکارواداکار علی ظفر کا کہنا ہے کہ ان کے پاس کام کی کمی نہیں۔

یاد رہے کہ ایک جانب جہاں بالی وڈ کی معروف شخصیت گلزار کو مبینہ طور پر سیکیورٹی وجوہات کی وجہ سے اپنے پاکستان کے دورے کو ادھورا چھوڑ کر واپس لوٹنا پڑا، وہیں کئی پاکستانی فنکار اور کھلاڑیوں کو بھی بھارت سے جانا پڑا تھا۔کشمیر میں ایل او سی پر تنازعات کے بعد سے دونوں ملکوں کے درمیان کشیدگی اور تلخی نظر آئی۔

لیکن بی بی سی ہندی کے لیے لکھنے والی ریکھا خان کے مطابق بالی وڈ کے پاکستانی اداکار علی ظفر کا خیال ہے کہ ان سب مسائل کے باوجود ان کے پاس کام کی بالکل کمی نہیں ہے۔علی ظفر کہتے ہیں کہ’مجھے نہیں معلوم کہ جو کام میرے پاس نہیں ہے وہ اس وجہ سے نہیں ہے کہ میں پاکستان سے ہوں۔ لیکن اس کے باوجود جو فلمیں میرے پاس ہیں اس سے میں بہت مطمئن ہوں اور شکرگزار ہوں کہ میں ان لوگوں کے پروجکٹ کا حصہ ہوں۔ طریقہ بدل گیا “ڈیوڈ دھون نے فلم کو آج کے زمانے کے حساب سے تیار کیا ہے۔

پہلی والی فلم اسّی کی دہائی کی معنویت کو پیش کررہی تھی اور وہ وقت مختلف تھا، اب ہم سب دوہزار تیرہ میں کھڑے ہیں، محبت کا اظہار کرنے کا طریقہ بدل گیا ہے اور اس لیے فلم کا انداز بھی بدلا ہے”کیا دونوں ممالک کے درمیان تلخیاں علی ظفر کو خوفزدہ کرتی ہیں؟ اس سوال کا جواب دیتے ہوئے علی ظفر نے کہا’خوفزدہ ہوکر کیا کرسکتا ہوں، کام تو کرنا ہی ہے۔ خوفزدہ ہونے کا کوئی فائدہ تو آج تک نہیں ہوا ہے۔ میں ایک مثبت فکر رکھنے والا انسان ہوں اور زندگی میں ہر چیز کو پرامید اور حوصلہ مند طریقے سے دیکھتا ہوں۔ اگر کبھی کچھ ہوگا تو دیکھی جائے گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔