آرمی چیف اور ایرانی صدر کی اہم ملاقات، سرحدی سلامتی اور علاقائی امن پر تبادلہ خیال

ویب ڈیسک  منگل 23 اپريل 2024
فوٹو اسکرین گریپ

فوٹو اسکرین گریپ

 راولپنڈی: چیف آف آرمی اسٹاف جنرل سید عاصم منیر اور ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کے درمیان اہم ملاقات ہوئی ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق آرمی چیف اور ایرانی صدر کی ملاقات میں بنیادی طور پر باہمی دلچسپی کے امور بالخصوص علاقائی امن، استحکام اور سرحدی سلامتی پر بات چیت ہوئی۔

مزید پڑھیں: فلسطین پر اسرائیلی ظلم کیخلاف پاکستانی عوام کا ردِعمل قابلِ تحسین ہے، ایرانی صدر

اعلامیے کے مطابق دونوں فریقین نے علاقائی استحکام اور اقتصادی خوشحالی کے لیے مشترکہ کوششوں، دوطرفہ تعاون کو فروغ دینے پر اتفاق کیا جبکہ آرمی چیف نے پاک ایران سرحد کو “امن اور دوستی کی سرحد” کے طور پر بیان کیا۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان ایران کا دہشتگردی کے خلاف مشترکہ کوششوں اور تجارتی حجم 10 ارب ڈالر تک بڑھانے پر اتفاق

آرمی چیف نے دونوں پڑوسی ممالک کو دہشت گردوں سے محفوظ رکھنے کے لیے سرحد کے ساتھ بہتر کوآرڈینیشن کی ضرورت پر زور دیا۔

اسے بھی پڑھیں: پاک ایران صدور کی ملاقات، غزہ کیلئے بین الاقوامی کوششیں تیز کرنے پر زور

اسے بھی پڑھیں: پاکستان اور ایران کا دہشت گرد تنظیموں پر پابندی عائد کرنے کا اصولی فیصلہ

ایرانی صدر نے کہا کہ دونوں مسلح افواج کے درمیان تعاون کو فروغ دے کر پاکستان اور ایران دونوں اقوام اور خطے کے لیے امن و استحکام حاصل کر سکتے ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔