جماعت اسلامی کا لوڈ شیڈنگ اور بھاری بلز کیخلاف احتجاج کا اعلان

ویب ڈیسک  ہفتہ 22 جون 2024
آئی پی پیز کا بوجھ غریب اور صنعتکار برداشت کررہے ہیں، امیر جماعت اسلامی پاکستان

آئی پی پیز کا بوجھ غریب اور صنعتکار برداشت کررہے ہیں، امیر جماعت اسلامی پاکستان

 لاہور: جماعت اسلامی نے ملک بھرمیں بجلی کی لوڈ شیڈنگ اور بھاری بلوں کے خلاف احتجاج کا اعلان کردیا۔

امیر جماعت اسلامی پاکستان حافظ نعیم الرحمن نے منصورہ لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گرمی کی شدت کو حکومت کی نااہلی اور طرز حکمرانی مزید بڑھا دیتی ہے، پورے ملک میں لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے، پاکستانی قوم 28 سو ارب کی کپیسٹی پیمنٹ کررہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ آئی پی پیز کا بوجھ غریب اور صنعتکار برداشت کررہے ہیں، بجلی کے بل نہیں بلکہ بم گرائے گئے ہیں، اوور بلنگ کی جارہی ہے، شدیدگرمی میں عوام نے عید گزاری، بارہ بارہ چودہ چودہ گھنٹے لوڈ شیڈنگ کا سامنا رہا، سرمایہ کاری ترسیلی نظام میں کرنے کے بجائے آئی پی پیز کو نوازنے کے لیے خرچ کردی گئی، ستر سال سے پاکستان میں ایک طبقہ مسلط ہے، پورے ملک میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ اور بھاری بلوں کے خلاف احتجاج کیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ جو بجٹ پیش کیاگیا اس میں عوام پر مزید ٹیکس کا بوجھ ڈالا گیا ، جو ٹیکسز نہیں دیتے وہ مراعات لیتے ہیں اور جو پہلے ہی ٹیکس دے رہے ہیں ان پر مزید بوجھ ڈالا جارہا ہے، بجٹ میں تیرہ ہزار ارب ٹیکسز اہداف سے مڈل کلاس طبقہ پسے گا، وزیر خزانہ شاہی فرمان جاری کرتے ہیں کہ سارے سرکاری ادارے پرائیویٹائز کردینے چاہئیں، آپ ہوتےکون ہیں ایسے بیانات دینے والے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔