بھارتی ریاست کیرالہ میں نایاب وائرس سے ہلاکتیں، اسکول اور دفاتر بند

ویب ڈیسک  بدھ 13 ستمبر 2023
[فائل-فوٹو]

[فائل-فوٹو]

نئی دہلی: بھارت کی جنوبی ریاست کیرالہ کی حکومت نے نایاب اور مہلک نیپاہ (Nipah) وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے اسکولوں، دفاتر اور پبلک ٹرانسپورٹ کو بند کر دیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق کیرالہ میں نیپاہ وائرس سے اب تک دو افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ ریاستی صحت کے ایک اہلکار نے بتایا کہ ایک بالغ اور ایک بچہ ابھی بھی ہسپتال میں تشویش ناک حالت میں ہیں جبکہ 130 سے ​​زائد افراد کا وائرس ٹیسٹ کیا گیا ہے۔

ریاست کی وزیر صحت وینا جارج نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ ہم متاثرہ افراد کے رابطوں کا جلد پتہ لگانے اور علامات کے حامل مریضوں کو عام آبادی سے الگ تھلگ کرنے پر توجہ مرکوز کر رہے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ کیرالہ میں پایا جانے والا وائرس بنگلہ دیش میں ایک وائرس کی مختلف قسم ہے جو انسانوں سے دوسرے انسانوں میں پھیلتا ہے اور اموات کی شرح بہت زیادہ ہے تاہم یہ کم متعدی ہے۔ طبی بحران پر قابو پانے کے لئے ریاست کے کچھ حصوں میں عوامی نقل و حرکت پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

واضح رہے کہ یہ وائرس متاثرہ چمگادڑوں، خنزیروں یا لوگوں کے جسمانی رطوبتوں کے ذریعے پھیلتا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔