شاہ رخ خان کی فلمیں فلاپ دیکھنا چاہتی تھی: گوری خان

ویب ڈیسک  اتوار 8 اکتوبر 2023
 شاہ رخ خان اور ان کی اہلیہ گوری خان کے 3 بچے ہیں: فوٹو ویب ڈیسک

شاہ رخ خان اور ان کی اہلیہ گوری خان کے 3 بچے ہیں: فوٹو ویب ڈیسک

 ممبئی: بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان کی اہلیہ و انٹیرئیر ڈیزائنر گوری خان نے انکشاف کیا ہے کہ وہ چاہتی تھیں کہ شاہ رخ خان کی تمام فلمیں فلاپ ہوجائیں۔

آج گوری خان اپنی 53ویں سالگرہ منا رہی ہیں، ایسے میں بھارتی میڈیا پر گوری خان کا پُرانا انٹرویو وائرل ہورہا ہے جس میں اُنہوں نے کہا تھا کہ وہ بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان کی فلمیں فلاپ دیکھنا چاہتی ہیں۔

بھارتی میڈیا کو دیے گئے ایک انٹرویو میں گوری خان نے کہا تھا کہ ‘میری شادی کم عُمر میں ہوگئی تھی اور جب شاہ رخ خان کے ساتھ ممبئی آئی تو زیادہ خوش نہیں تھی’۔

گوری خان نے کہا کہ ‘میرے لیے پہلی بار ممبئی آنا اور پھر فلمیں، شوبز وغیرہ، یہ سب کچھ نیا اور حیران کُن نیا تھا، مجھے اپنے گھر کی بہت یاد آتی تھی، ممبئی آکر بالکل خوش نہیں تھی’۔

اُنہوں نے مزید کہا کہ ‘میں چاہتی تھی کہ شاہ رخ خان کی تمام فلمیں فلاپ ہوجائیں کیونکہ مجھے ایسا لگتا تھا کہ اگر فلمیں فلاپ ہوجائیں گی تو ہم واپس دہلی اپنے گھر چلے جائیں گے’۔

گوری خان نے کہا کہ ‘مجھے معلوم ہی نہیں ہوا کہ کب اور کیسے شاہ رخ خان بالی ووڈ کے اسٹار بن گئے’۔

مزید پڑھیں: شاہ رخ خان نے گوری سے 3 بار شادی کیوں کی؟

واضح رہے کہ شاہ رخ خان کا بالی ووڈ میں کامیاب کیریئر رہا ہے، رواں سال اُن کے کیریئر کا بہترین سال رہا ہے، یش راج فلمز کی ’پٹھان‘ نے پوری دنیا میں کامیابی سے بزنس کرتے ہوئے 1050 کممروڑ کا مجموعی بزنس کیا جبکہ ایٹلی کی ’جوان‘ اب تک پوری دنیا میں 1090 کروڑ کا بزنس کرچکی ہے۔

شاہ رخ خان کی دونوں فلمیں 2141 کروڑ کا بزنس کرچکی ہیں اور کنگ خان انڈسٹری کے واحد اداکار بن گئے ہیں جن کی دو فلموں نے ایک برس میں ایک ہزار سے زائد کا بزنس کیا ہے۔

مزید پڑھیں: شاہ رخ خان کی ‘پٹھان فیملی فوٹو’ وائرل

اداکار کی ایک میگا فلم ’ڈنکی‘ باقی ہے جسے راج کمار ہیرانی بنارہے ہیں، ‘پٹھان’ اور ‘جوان’ کے بعد اب وہ اپنی سال کی تیسری ریلیز ‘ڈنکی’ کی تیاری کر رہے ہیں۔

یاد رہے کہ شاہ رُخ خان اور گوری خان 3 دہائی قبل 1991 میں رشتہ ازدواج میں منسلک ہوئے تھے، گوری خان ایک انٹیرئیر ڈیزائنر اور بزنس ویمن ہیں، اس خوبصورت جوڑی کے 3 بچے ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔