آسٹریلیا؛ خاتون پر ہوٹل میں ہیئر ڈرائر کے استعمال پر لاکھوں روپے جرمانہ

ویب ڈیسک  پير 18 دسمبر 2023
خاتون کے ہیئر ڈرائر چلانے سے ہوٹل کا فائر الارم بج اُٹھا تھا، فوٹو: فائل

خاتون کے ہیئر ڈرائر چلانے سے ہوٹل کا فائر الارم بج اُٹھا تھا، فوٹو: فائل

پرتھ: آسٹریلیا میں ایک ہوٹل کی انتظامیہ نے  ہیئر ڈرائر استعمال کرنے پر خاتون سے 1400 آسٹریلوی ڈالرز (تقریباً 2 لاکھ 63 ہزار روپے) جرمانہ وصول کیا۔

نیویارک پوسٹ کے مطابق آسٹریلوی خاتون نووٹیل پرتھ لینگلے کے کنگز پارک میں منسٹری آف ساؤنڈ کنسرٹ دیکھنے کے لیے ہوٹل میں ٹھہری ہوئی تھیں۔

غسل کے بعد خاتون نے ہیئر ڈرائر سے بال سُکھائے جس سے ہوٹل کا فائر الارم بج اُٹھا۔ ایئر فائٹر نے دروازے پر دستک دیکر خاتون کو خطرے سے آگاہ کیا اور فوراً کمرہ چھوڑنے کی ہدایت کی۔

فائر فائٹر خاتون کو نکال کر خود کمرے میں داخل ہوا تو وہاں کچھ نہیں تھا۔ پوچھنے پر خاتون نے بتایا کہ وہ ہیئر ڈرائر استعمال کر رہی تھیں۔

خاتون نے تین دن بعد اپنے ہوٹل کا بل دیکھا تو اس میں 1400 ڈالرز جرمانہ بھی شامل تھا جس کے متعلق ہوٹل نے بتایا کہ یہ فائر ڈپارٹمنٹ کے لیے کال آؤٹ فیس تھی۔

خاتون نے کہا یہ چارج تو آسٹریلیا کے محکمہ فائر بریگیڈ کے چارجز سے بھی زیادہ ہے۔اسے کم کیا جائے لیکن ہوٹل انتظامیہ نے انکار کردیا جس کے بعد نہ تو فون کال اور نہ ہی ای میل کا جواب دیا۔

بعد ازاں سوشل میڈیا پر یہ بات وائرل ہونے کے بعد ہوٹل کے ایک منیجر نے خاتون نے کو اضافی چارج واپس کر دیا۔

یاد رہے کہ چین میں ایک ہوٹل نے دوسری بار نہانے پر صارفین سے فیس وصول کرنے کی پالیسی اپنائی تھی جس پر سوشل میڈیا پر کڑی تنقید کی گئی تھی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔