مصنوعی ہاتھ کے ذریعے درجہ حرارت بھی محسوس کرنے کا کامیاب تجربہ

ویب ڈیسک  اتوار 11 فروری 2024
[فائل-فوٹو]

[فائل-فوٹو]

پیسا، اٹلی: سائنسدانوں نے ہاتھوں سے معذور افراد کیلئے ایک مصنوعی ہاتھ تیار کیا ہے جس میں ایسے سینسر نصب ہیں جو پہننے والے کو اشیا کا حقیقی درجہ حرارت کا احساس فراہم کرتے ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اٹلی کے محققین نے اس مصنوعی عضو کا تجربہ فیبریزیو نامی شخص پر کیا جس نے چند سالوں پہلے ایک حادثے میں اپنا دایاں ہاتھ گنوا دیا تھا۔

تاہم اس مصنوعی ہاتھ کی مدد سے فیبریزیو نے مختلف درجہ حرارت کی حامل اشیاء کے درمیان تفریق کرنے اور اسے ترتیب دینے کا عمل انجام دیا۔ محققین نے کہا کہ یہ پہلی بار ہے کہ قدرتی درجہ حرارت کے احساس کو ایک فنکشنل مصنوعی ہاتھ میں ضم کیا گیا ہے۔

محققین نے بتایا کہ MiniTouch نامی مصنوعی ہاتھ میں عام دستیاب الیکٹرانکس ہی استعمال ہوئی ہیں جبکہ مریضوں کو درجہ حرارت کی حس بحال کرنے کے لیے کسی سرجری کی بھی ضرورت نہیں ہے۔

مطالعے کے شریک سینئر مصنف اور اٹلی کے سانتانا اسکول آف ایڈوانسڈ اسٹڈیز میں بائیو روبوٹکس ریسرچ کے پروفیسر سلویسٹرو مسرا نے کہا کہ آرٹیفیشل ہاتھوں میں لمس کے احساس کے ساتھ درجہ حرارت بھی محسوس کرنا آخری کڑی تھی جسے تقریباً مکمل کرلیا گیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔