بشریٰ بی بی کو اڈیالہ جیل منتقل کرنے سے انتظامیہ کا انکار

ویب ڈیسک  جمعرات 22 فروری 2024
سرکاری وکیل کی درخواست پر عدالت نے سماعت 2 ہفتوں تک ملتوی کردی:فوٹو:فائل

سرکاری وکیل کی درخواست پر عدالت نے سماعت 2 ہفتوں تک ملتوی کردی:فوٹو:فائل

 اسلام آباد: اڈیالہ جیل کی انتظامیہ نے عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کو جیل منتقل کرنے سے انکار کردیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ میں بانی پی ٹی آئی کی اہلیہ بشریٰ بی بی کی اڈیالہ جیل منتقلی کی درخواست پر سماعت ہوئی۔ جیل انتظامیہ نے بشریٰ بی بی کو جیل منتقل کرنے سے انکار کردیا۔

سپرٹنڈنٹ اڈیالہ جیل نے اپنی رپورٹ  عدالت میں جمع کروادی۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سیکورٹی وجوہات کے باعث بشریٰ بی بی کو جیل منتقل نہیں کرسکتے۔ جیل میں پہلے ہی جگہ کم ہے اور 250 خواتین قیدی موجود ہیں۔

مزید پڑھیں: بشریٰ بی بی نے بنی گالہ سے اڈیالہ جیل منتقلی کیلیے عدالت سے رجوع کرلیا

چیف کمشنر اسلام آباد نے اس سلسلے میں اپنا جواب جمع نہیں کروایا۔ سرکاری وکیل نے جواب دینے کے لیے وقت دینے کی استدعا کی جسے عدالت نے منظور  کرتے ہوئے سماعت 2 ہفتوں تک ملتوی کردی۔ توشہ خانہ کیس میں سزا یافتہ بشریٰ بی بی نے سب جیل قرار دی گئی بنی گالہ سے اڈیالہ جیل منتقلی کے لیے اسلام آباد ہائی کورٹ سے رجوع کیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔