ہتک عزت قانون واپس پنجاب اسمبلی بھیجنے کیلیے مراسلہ گورنر کو ارسال

ویب ڈیسک  بدھ 22 مئ 2024
گورنر کو بل پر دستخط سے روکنے کے لیے آئین کے آرٹیکل 116 کے تحت مراسلہ ارسال کیا گیا ہے۔

گورنر کو بل پر دستخط سے روکنے کے لیے آئین کے آرٹیکل 116 کے تحت مراسلہ ارسال کیا گیا ہے۔

 لاہور: ہتک عزت قانون کو پنجاب اسمبلی واپس بھیجنے کے لیے گورنر پنجاب کو مراسلہ ارسال کر دیا گیا۔

جوڈیشل ایکٹوازم پینل کے سربراہ اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے مراسلہ گورنر پنجاب کو بھجوایا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ہتک عزت کا قانون آئین کے آرٹیکل 19 کے منافی ہے۔

مراسلے میں کہا گیا ہے کہ اس قانون کے نفاذ سے آزادی اظہار رائے کو روکا گیا جو بنیادی حق کے خلاف ہے، ہتک عزت قانون معلومات تک رسائی کے شہریوں کے حق میں بڑی رکاوٹ ہے جبکہ قانون کے نفاذ سے آزادی اظہار کا گلہ کاٹ دیا گیا۔

بل کی منظوری شہریوں کے بنیادی حقوق کے منافی ہے اور بل کے نفاذ کے ذریعے سیاسی مفادات حاصل کرنے کا خدشہ ہے لہٰذا گورنر بل کو منظور کیے بغیر اسمبلی واپس بھجوائے۔

گورنر کو بل پر دستخط سے روکنے کے لیے آئین کے آرٹیکل 116 کے تحت مراسلہ ارسال کیا گیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔