دنیا کی مشہور ای کامرس کمپنی نے سوناکشی کو ’ماموں‘ بنا دیا

ویب ڈیسک  جمعرات 13 دسمبر 2018
کیا کوئی شخص بلکل نئی اور چمکدار غیر میعاری لوہے کو 18 ہزار روپے میں خریدنا چاہتا ہے ؟،سوناکشی۔ فوٹو: فائل

کیا کوئی شخص بلکل نئی اور چمکدار غیر میعاری لوہے کو 18 ہزار روپے میں خریدنا چاہتا ہے ؟،سوناکشی۔ فوٹو: فائل

 ممبئی: ای کامرس کمپنیوں کی جانب سے صارفین کے ساتھ دھوکا دہی اور غلط سامان کی ترسیل معمول کی بات ہے لیکن جب سوناکشی سنہا جیسے فلمی ستارے کو دنیا کی سب سے بڑی ای کامرس کمپنی ہیڈ فون کے بجائے پانی کی لائنوں میں استعمال ہونے والا والو تھمادے تو پھر عام لوگ کیا چیز ہیں۔

دنیا بھر میں موجود لاکھوں لوگوں کی طرح بالی ووڈ کی دبنگ گرل سوناکشی سنہا بھی ای کامرس کمپنی کے ہاتھوں ماموں بن گئیں، سوناکشی نے اپنے ساتھ ہونے والی دھوکا دہی کی کہانی اور تصویر ٹوئٹر پر شیئر بھی کرڈالی۔

سوناکشی نے اپنی پہلی ٹوئٹ میں ہیڈ فون بنانے والی بین الاقوامی کمپنی کے ڈبے میں نفاست سے رکھے پانی کی لائن میں لگنے والے والو کی تصویر شیئر کی ہے، جس کے ساتھ انہوں نے لکھا ہے کہ کیا کوئی شخص غیر معیاری لوہے کو 18 ہزار روپے میں خریدنا چاہتا ہے ؟۔پریشان ہونے کی بات نہیں، میں یہ اس آن لائن کمپنی پر فروخت نہیں کر رہی۔ میری طرف سے آپ کو وہی چیز ملے گی جو آپ نے آرڈر کی ہوگی۔

سوناکشی سنہا نے اگلی ٹوئٹ میں ہیڈ فون کے ڈبے سے نکلنے والے پرزے کی کہانی سے پردہ اٹھانا شروع کیا، انہوں نے ای کامرس کمپنی کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ نظر کرم فرمائیں، ہیڈ فون آرڈر کرنے پر مجھے کیا ملا ہے۔  ڈبہ باقائدہ طور پر پیک اور وزن کے اعتبار سے بھاری بھی ہے لیکن یہ صرف باہر سے ہے۔ اور تو اور آپ کی کسٹمر سروس بھی اس سلسلے میں کوئی مدد نہیں کرنا چاہتی جس سے صورت حال اور بھی بدتر ہوجاتی ہے۔

سوناکشی کی ٹوئٹ کے بعد آن لائن کمپنی پر کی جانے والی تنقید جب شدید ہو گئی تو کمپنی بھی جوابی ٹوئٹ کےساتھ میدان میں آگئی۔ جس میں کمپنی نے ناصرف سوناکشی سے معافی مانگی بلکہ اسے یہ ناقابل قبول قرار دیتے ہوئے ایک یو آر ایل بھی فراہم کردیا جہاں اس معاملے کی شکایت کرنے کی درخواست کی گئی، کمپنی نے اپنی ٹوئٹ میں یہ یقین دہانی بھی کرائی کہ انتظامیہ ان سے اس حوالے سے رابطے میں رہے گی۔

 



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔