پاکستان کرکٹ سے مایوس ہوکر ٹیسٹ کرکٹر سمیع اسلم کا بھی ملک چھوڑنے کا فیصلہ

ویب ڈیسک  ہفتہ 21 نومبر 2020
محمد آصف اور رمیز راجہ جونیئر کے بعد سمیع اسلم نے بھی امریکا کی نمائندگی کا ذہن بنالیا

محمد آصف اور رمیز راجہ جونیئر کے بعد سمیع اسلم نے بھی امریکا کی نمائندگی کا ذہن بنالیا

ٹیسٹ کرکٹر محمد آصف کے بعد پی سی بی کے رویے سے نالاں سمیع اسلم نے بھی امریکہ کی نمائندگی کا ذہن بنالیا۔

قائڈ اعظم ٹرافی میں بلوچستان کی جانب سے تین میچز کھیلنے کے بعد اب سمیع اسلم ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کے لیے چند روز میں امریکا روانہ ہوجائیں گے۔ سمیع اسلم نے سفری دستاویزات مکمل کرنے کے ساتھ رہائش کا بھی بندوبست کرلیا ہے۔

اس خبر کو بھی پڑھیں؛ ڈیپارٹمنٹل کرکٹ سے مایوس ہوکر کھلاڑی بیرون ملک منتقل ہونا شروع

ذرائع کے مطابق سمیع اسلم مقررہ مدت پوری کرنے کے بعد امریکہ کی جانب سے کھیلنے کے اہل ہوں گے۔ سمیع اسلم کے علاوہ دیگر کئی ممالک کے کرکٹرز بھی امریکہ کی جانب سے کھیلنے کے لیے کوشاں ہیں۔

اس خبر کو بھی پڑھیں؛ عرفان جونیئر کا ڈومیسٹک کرکٹ چھوڑ کرآسٹریلیا میں کھیلنے کا فیصلہ

اس سے قبل متعدد کھلاڑی ڈیپارٹمنٹل کرکٹ سے مایوس ہونے اور قومی ٹیم میں نمائندگی نہ ملنے کی وجہ سے ملک چھوڑ کر دیگر ممالک سے کھیلنے کا فیصلہ کرچکے ہیں جن میں سابق ٹیسٹ کرکٹر محمد آصف، پی ایس ایل میں کراچی کنگز کی نمائندگی کرنے والے فاسٹ بولر عرفان جونیئر اور کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی جانب سے کھیلنے والے رمیز راجہ جونیئر شامل ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔