آرٹیکل 62، 63 ججز اور جرنیلوں پر بھی لاگو ہوناچاہیے، سراج الحق

ویب ڈیسک  اتوار 13 اگست 2017
آرٹیکل 62 اور 63 کے خاتمے کے خلاف جماعت اسلامی دیگرجماعتوں کے ساتھ مل کر رکاوٹ بنے گی، سراج الحق : فوٹو: فائل

آرٹیکل 62 اور 63 کے خاتمے کے خلاف جماعت اسلامی دیگرجماعتوں کے ساتھ مل کر رکاوٹ بنے گی، سراج الحق : فوٹو: فائل

گجرات: امیرجماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا ہے کہ آرٹیکل 62 اور 63 کو ختم کرنے کا خیال دل سے نکال کر اسے ججز، جرنیلوں اور سرکاری افسران پر بھی نافذ کرنا چاہئے۔

گجرات میں سابق وزیراعظم نوازشریف کی پروٹوکول گاڑی تلے کچل کر جاں بحق ہونے والے بچے حامد کی رسم قل کے موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے امیرجماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ ہمارے معاشرے میں وی آئی پی کلچر فروغ پارہا ہے غریبوں کا کوئی پرسان حال نہیں، کسی بھر غریب انسان کے خون کی کوئی قیمت نہیں، وزیراعظم کے اسکواڈ میں شامل گاڑی نے پہلے بچے کو کچلا اور پھر بچے کو روندتے ہوئے تڑپتا چھوڑکر آگے نکل گئے کیا یہ بے حسی نہیں۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: ہواؤں میں اڑنے والوں کو جی ٹی روڈ پر لاکھڑا کیا

امیرجماعت اسلامی نے کہا کہ نوازشریف کے قافلے میں بڑے بڑے چور بھی شامل تھے اور یہ لوگ اب آرٹیکل 62 اور 63 کو ختم کرنے کے درپے ہوگئے ہیں لیکن ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے اور رکاوٹ بنیں گےجب کہ دیگر جماعتوں کو بھی اس مسئلے پر متفق کیاجائے گا۔ انہوں نے کہا کہ آرٹیکل 62 اور 63 کو ختم کرنے کا خیال بھی دل سے نکال دینا چاہئے بلکہ میں چاہتا ہوں کہ اس آرٹیکل کو ججز، جرنیلوں اور سرکاری افسران پر بھی لاگو ہونا چاہئے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: جمہوریت پر35 سالہ قبضے کا خاتمہ ہوگیا



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔