لاہور دھماکے کے سہولت کار کا اعترافی بیان سامنے آگیا

ویب ڈیسک  جمعـء 17 فروری 2017
دھماکے کے لیے ایک سے دو لاکھ روپے دینے کا کہا گیا، سہولت کار کا اعترافی بیان، اسکرین گریب/ ایکسپریس نیوز

دھماکے کے لیے ایک سے دو لاکھ روپے دینے کا کہا گیا، سہولت کار کا اعترافی بیان، اسکرین گریب/ ایکسپریس نیوز

 لاہور: پنجاب حکومت نے مال روڈ پر ہونے والے دھماکے کے سہولت کار کا اعترافی بیان جاری کردیا جس میں ملزم نے اعتراف کیا کہ لاہور دھماکے کا مقصد پولیس والوں کو ہدف بنانا تھا۔

سانحہ مال روڈ میں ملوث دہشت گرد کے سہولت کار انوار الحق نے اپنے اعترافی ویڈیو بیان میں بتایا کہ اس کا تعلق باجوڑ ایجنسی سے ہے جب کہ وہ کالعدم جماعت الاحرار کے لیے کام کرتا ہے۔ سہولت کار نے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ میری عرفیت ابو ہریرہ رکھی گئی ہے، میں خودکش حملہ آور کو پشاور سے اپنے ساتھ لایا تھا جب کہ مجھے کہا گیا کہ آپ نے پولیس والوں کو ٹارگٹ کرنا ہے۔

اس خبر کو بھی پڑھیں: لاہورمال روڈ خود کش حملے کا سہولت کار گرفتار

سہولت کار نے مزید اعتراف کرتے ہوئے بتایا کہ حملے کے لیے خودکش جیکٹ 15 سے 20 روز قبل مجھے پہنچائی گئی تھی جب کہ مجھے ایک سے 2 لاکھ روپے دینے کا کہا گیا تھا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔