پاکستان کیخلاف جنگ کی ٹویٹ پر پریانکا ایک بار پھر تنقید کا نشانہ

ویب ڈیسک  پير 12 اگست 2019
پریانکا چوپڑا نے اقوام متحدہ کی امن کی سفیر ہونے کے باوجود پاکستان کے خلاف جنگ کرنے کی حمایت کی تھی۔ فوٹو: فائل

پریانکا چوپڑا نے اقوام متحدہ کی امن کی سفیر ہونے کے باوجود پاکستان کے خلاف جنگ کرنے کی حمایت کی تھی۔ فوٹو: فائل

 اسلام آباد: بالی ووڈ اداکارہ و اقوام متحدہ کی سفیر برائے امن پریانکا چوپڑا کو پاکستان کے خلاف جنگ کی حمایت کرنے کی ٹوئٹ پر تقریب میں منافق کا لقب مل گیا۔

لاس اینجلس میں ہونے والی ایک تقریب میں پریانکا چوپڑا نے شرکت کی اس دوران عائشہ ملک نامی ایک خاتون نے پریانکا چوپڑا کی ماضی کی پاکستان سے جنگ کے خلاف ٹوئٹ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایسا بہت ہی کم ہوا کہ ہے کہ آپ نے امن اور انسانیت کی بات کی ہو کیوں کہ ایک پڑوسی پاکستانی ہونے کے ناطے میں جانتی ہوں کہ آپ ایک منافق ہیں۔ آپ نے ٹوئٹ کی اور اس میں اپنی آرمی کا ہیش ٹیگ بھی استعمال کیا۔

عائشہ ملک نے پریانکا چوپڑا کا اصل چہرا بے نقاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ آپ یونیسیف کی سفیر برائے امن ہیں اور پھر بھی آپ پاکستان کے خلاف ایٹمی جنگ کے خلاف اکسا رہی ہیں۔

دوسری جانب شیریں مزاری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنی ایک ٹوئٹ میں مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ یونیسیف کو چاہیے کہ بھارتی افواج اور مودی کی بدقماش حکومت کی حمایت پر پریانکا چوپڑا کو فوری طور پر انہیں اعزازی سفیر کے عہدے سے سبکدوش کرے۔بصورتِ دیگر یہ اس طرح کے اہم عہدے کے ساتھ ایک مذاق ہوگا۔ یونیسیف کو اس طرح کے اہم اعزازی عہدوں کے لیے لوگوں کا انتخاب کرتے ہوئے مزید احتیاط اختیار کرنا چاہیے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔