وزیراعظم ہاؤس کے سامنے ایک شخص کی خود سوزی

ویب ڈیسک  جمعـء 3 اپريل 2020
فیصل نامی شخص نے مری پولیس سے انصاف نہ ملنے پر احتجاجاً خود کو آگ لگائی، پولیس۔ فوٹو:فائل

فیصل نامی شخص نے مری پولیس سے انصاف نہ ملنے پر احتجاجاً خود کو آگ لگائی، پولیس۔ فوٹو:فائل

 اسلام آباد: وفاقی دارالحکومت میں وزیراعظم ہاؤس کے سامنے شاہراہ دستور پر مری پولیس سے انصاف نہ ملنے پر خود کو آگ لگانے والا شخص دم توڑ گیا۔

پولیس کے مطابق فیصل عزیز نامی شخص نے نماز جمعہ سے کچھ دیر قبل وزیراعظم سیکریٹریٹ کے سامنے خود کو آگ لگالی جس سے وہ بری طرح جھلس گیا، موقع پر موجود پولیس اہلکاروں اور راہگیروں نے آگ بجھائی اور شدید زخمی حالت میں پمز کے برن یونٹ منتقل کیا جہاں کچھ دیر زیر علاج رہنے کے بعد فیصل دم توڑ گیا۔

پولیس کے مطابق فیصل عزیز نے مری تھانہ بیول شریف میں ایک بااثر سیاسی شخص جواد عباسی کے خلاف آر پی او راولپنڈی کو درخواست دی تھی تاہم پولیس نے کوئی ایکشن نہ لیا بلکہ الٹا جواد عباسی نے اسے مبینہ قتل کی دھمکیاں دیں جس پر مری پولیس سے انصاف نہ ملنے پر احتجاجاً وزیراعظم سیکریٹریٹ کے سامنے خود کو آگ لگائی۔

دوسری جانب ڈپٹی کمشنر محمد حمزہ شفقات کا کہنا ہے کہ متوفی فیصل نشئی تھا اور اس پر بچی سے زیادتی کا بھی 7 سال پرانا کیس تھا، اس کے بھائی کے ساتھ بھی ان کی بات ہوئی ہے جس نے کہاہے کہ فیصل آوارہ پھرتا رہتا تھا تاہم واقعہ کی جوڈیشل انکوائری کے احکامات جاری کردیے گئے  ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔