ہزارہ یونیورسٹی کی طلبہ تنظیموں میں تصادم کے دوران دستی بموں سے حملہ، 10زخمی

ویب ڈیسک  جمعرات 11 جون 2015

مانسہرہ: ہزارہ یونیورسٹی میں 2 طلبہ تنظیموں کے درمیان تصادم اور دستی بموں سے حملے کے نتیجے میں 10 طالب علم زخمی جب کہ طالبات محصور ہو گئیں۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق مانسہرہ کی ہزارہ یونی ورسٹی میں 2 طلبہ تنظیموں کے درمیان مسلح تصادم ہوا اور دیکھتے ہی دیکھتے صورت حال انتہائی کشیدہ ہو گئی کہ ایک طلبہ تنظیم کے کارکنوں کی جانب سے دستی بموں سے حملہ کردیا گیا جس کے نتیجے میں 10 طالبعلم زخمی ہو گئے۔

واقعہ کے بعد پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی اور یونیورسٹی کو سیل کردیا جس کے باعث طالبات کی بڑی محصور ہو گئی ہیں۔ طلبہ تنظیموں کے درمیان تصادم کے بعد یونی ورسٹی انتظامیہ نے تدریسی عمل غیر معینہ مدت کے لئے ملتوی کردیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔