تازہ ترین 
< >
rss

 آفتاب احمد خانزادہ

خود کو پہچانیے

قدیم یونانی دانشوروں اور فلسفیوں نے دنیا کو زندگی کی حقیقتوں اور سچائی سے روشناس کروایا۔

December 13, 2020

زندگی صرف آج کے دن میں ہے

ہم سب اس وقت دو ابدیتوں کے مقام اتصال پر کھڑے ہیں ہمارے ایک طرف لامحدود ماضی ہے جو ازل سے جاری ہے۔

November 29, 2020

ہم تبدیلی کے سامنے خود رکاوٹ ہیں

قدیم ہندوستانی داناؤں کا کہنا تھا کہ ہم پر پہلی ذمے داری ہمارے سماج کی ہوتی ہے پھر خاندان کی اور آخر میں ہماری اپنی۔

November 22, 2020

کیا یہ سب روپے کھاتے ہیں!

کہتے ہیں جتنی گالیاں یہ سب دے سکتے ہیں، مجھے دیتے ہیں اور میں بے شرموں ، بے حسوں کی طرح سب کچھ سنتا رہتا ہوں۔

November 8, 2020

12خرابیوں کے بھوت

وحشت ناک بات یہ ہے کہ ان کے ایجنڈے کی کامیابی میں روز بروز اضافہ ہوتا ہی چلا جارہا ہے۔

November 1, 2020

پریشانی حالات سے نہیں، خیالات سے ہوتی ہے

ذہن میں رہے پریشانیاں انسان کے جسم کے تمام نظاموں کو تہہ و بالا کرکے رکھ دیتی ہیں۔

October 25, 2020

جبر کی کہانی کبھی نہیں مرتی

ہمارے سماج میں جبر سے مرنے والوں کی تعداد ہزاروں نہیں بلکہ لاکھوں ہے وہ سب انسان بے وقت ، بے موت مار دیے گئے۔

October 18, 2020

پیٹ سے سوچنے والے

بااختیار، طاقتور،تختوں پر بیٹھے ہمیں بھونکتے انسانوں سے زیادہ کوئی حیثیت، رتبہ یا مرتبہ دینے کو تیار ہی نہیں ہیں۔

October 11, 2020

جھوٹ بولنے والے اور سننے والے

ہم جھوٹ سننے کے اس قدر عادی ہو چکے ہیں کہ کوئی ہمیں سچ بھی بتائے تو ہم اس کی بات پر یقین کرنے کے لیے آمادہ نہیں ہوتے۔

October 4, 2020

ہمیں ہرقسم کے مجرموں کا سامنا ہے

بے شرمی اور بے حیائی کی اس وقت حد ہوجاتی ہے جب مجرم سرے عام سچ کو ننگی ننگی گالیاں دیتے پھررہے ہوتے ہیں۔

September 27, 2020
2